ہزار چہروں میں وہ ایک چہرہ

face_by_dawidzdobylak_daqb62h-fullview

ہزار چہروں میں

وہ ایک چہرہ

وہ جسے

تلاش کرتی ہیں

تیری نظریں

 

بہت چہروں میں

وہ ایک چہرہ

پھر نہیں ملے گا

کبھی نہیں ملے گا

 

ہزار صدیوں میں

وہ ایک لمحہ

وہ جسے

تلاش کرتی ہے

تیری چاہت

بہت لمحوں میں

 

وہ ایک لمحہ

پھر نہیں ملے گا

کبھی نہیں ملے گا

 

دیوانی ہوا کا

وہ ایک جھونکا

کہ جس کی خوشبو

سے یاد آئے

کسی کی قربت

کسی کی سانسیں

 

وہ ایک جھونکا

پھر نہیں ملے گا

کبھی نہیں ملے گا

 

 

بہتے پانی کا

وہ ایک نغمہ

کہ جس کے

تسلسل سے یاد آئے

 کسی کی باتیں

کسی کے وعدے

 

وہ ایک نغمہ

پھر نہیں ملے گا

کبھی نہیں ملے گا

 

 

6 thoughts on “ہزار چہروں میں وہ ایک چہرہ

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s